1,372

سٹاک مارکیٹ: 1221.55 پوائنٹس کی مندی، انویسٹرز کے 180 ارب ڈوب گئے

لاہور: (ویب ڈیسک) رواں ہفتے کے پہلے کاروباری روز کے دوران پاکستان سٹاک مارکیٹ کریش کرگئی ۔ 1221.55 پوائنٹس کی مندی کے بعد انویسٹرز کے 180 ارب روپے سے زائد ڈوب گئے۔

فصیلات کے مطابق حصص مارکیٹ میں غیر یقینی صورتحال تیسرے ہفتے میں بھی داخل ہو گئی ہے، گزشتہ دو ہفتوں میں مسلسل مندی رہنے کے بعد تیسرے ہفتے کے پہلے کاروباری روز کے دوران انڈیکس میں 1221.55 پوائنٹس گراوٹ دیکھی گئی۔ مندی کے باعث 12 حدیں گر گئیں۔ گرنے والی حدوں میں 41600، 41500، 41400، 41300، 41200، 41100، 41000، 40900، 40800، 40700، 40600، 40500 کی حدیں شامل ہیں۔

گزشتہ ہفتے کے دوران مندی نے سٹاک مارکیٹ کو جکڑے رکھا تھا، کاروباری ہفتے کے پہلے روز کے دوران 93.79 پوائنٹس، دوسرے روز 240 پوائنٹس، تیسرے روز 400 پوائنٹس گرا جبکہ چوتھے روز کے دوران صرف چار پوائنٹس کی تیزی دیکھی گئی تھی، تاہم کاروباری آخری روز کے دوران ایک مرتبہ پھر 272.56 پوائنٹس کی مندی آئی اور انڈیکس 41630.94 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا تھا۔

آج کاروبار کا آغاز ہی غیر یقینی صورتحال کے باعث ہوا، پہلے دو گھنٹوں کے دوران انویسٹرز کی ٹریڈنگ میں عدم دلچسپی دیکھنے میں آئی جس کے باعث پہلے ہی دو گھنٹوں کے دوران 600 پوائنٹس کی گراوٹ دیکھی گئی اور انڈیکس کی 41 ہزار کی نفسیاتی حد گر گئی تھی۔

پاکستان سٹاک مارکیٹ میں اُتار چڑھاؤ کے باعث مندی چھائی رہی اور انویسٹرز کی طرف سے شیئرز فروخت کرنے کو ترجیح دی۔ ایک موقع پر انڈیکس 40233.64 پوائنٹس کی نچلی ترین سطح پر پہنچ گیا تھا۔

پاکستان سٹاک مارکیٹ میں کاروبار کے اختتام پر انڈیکس میں 1221.55 پوائنٹس کی مندی دیکھی گئی، مندی کے بعد انڈیکس 40409.38 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ گیا۔

آج پورے دن کاروبار میں 3.02 فیصد کی تنزلی دیکھی گئی جبکہ 15 کروڑ 1 لاکھ 12 ہزار 310 شیئرز کا لین دین ہوا، سرمایہ کاروں کے 180 ارب روپے سے زائد ڈوب گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں