ڈاکٹر ذاکر نائیک کو بھارت میں واپس لانے کیلئے ان کیخلاف مقدمات تیار کر لیےگئے

image

بھارتی حکام نے معروف اسلامی سکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک کو ملک میں واپس لانے کیلئے ان کیخلاف مقدمات تیار کر لیے ہیں۔ ذاکر نائیک ان دنوں ملائیشیا میں میں مقیم ہیں۔ قانونی عمل مکمل ہونے کے بعد انھیں بھارت کے حوالے کرنے کی باضابطہ درخواست بھیج دی جائے گی۔ بھارتی تحقیقاتی ادارے این آئی اے کا الزام ہے کہ 52 سالہ ذاکر نائیک نوجوانوں کو انتہا پسندی کی جانب راغب کرنے، دہشتگردی کے لیے رقوم فراہم کرنے اور منی لانڈرنگ میں بھی ملوث ہیں۔ این آئی اے کا یہ بھی الزام ہے کہ ذاکر نائیک کی اسلامک ریسرچ فاؤنڈیشن مذہبی منافرت کو فروغ دینے اور دیگر غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث ہے۔

دوسری جانب نائیک نے ان الزامات کو یہ کہتے ہوئے مسترد کر دیا ہے کہ انہیں بھارت میں اقلیتوں کے خلاف جاری مذہبی ایذا رسانی اور عقوبت کا ہدف بنایا جا رہا ہے۔

خبریں